آپر یشن سے نجات

ناظرین ِ کرام ایک بچے کی پیدائش کسی بھی شادی شدہ کی زندگی کا سب سے خوبصورت لمحہ ہوتا ہے اور ان کی خواہش ہوتی ہے کہ ان کا بچہ حمل کے پہلے لمحے سے لے کر پیدائش تک ہر قسم کے خطرے اور پیچیدگی سے محفوظ رہے اور اس کے لیے اپنی اوقات سے بڑھ کر ہر ممکن کو شش کر نے کے لیے تیار ہوتا ہے۔ آج کل ڈاکٹر ماں باپ کی اس کمزوری سے فائدہ اٹھاتے ہوئے نا رمل ڈلیوری کی بجائے سی سیکشن بچے کی پیدائش کروانے کا مشورہ دیتے ہیں۔ بعض صورتحال سی سیکشن ماں اور بچے کی زندگی کے لیے ضروری بھی ہو سکتا ہے مگر بعض حالات میں ڈاکٹرز صرف اور صرف یہ مشورہ اپنی فیس بڑھانے کے لیے بھی کرتے ہیں۔

مگر آج کی اس ویڈیو میں آپ کو ڈلیوری آپر یشن سے بچنے کے لیے اللہ کے ایک ایسے خاص نام کا عمل بتا ئیں گے جس کے ذریعے آپ آپر یشن سے بچ جائیں گے۔ وہ عمل صرف گیارہ دن کریں اور آپریشن سے جان چھڑوائیں۔ عزیز خواتین و حضرات معاشرے میں عورت کو ایک خاص مقام حاصل ہے۔ مادا پرستی میں اور نفسا نفسی میں کے اس دور میں عورتیں کئی مسائل سے دوچار ہیں ۔ جن میں سر فہرست زچگی کی وقت آپر یشن کر وانا ہے۔ فیشن ایبل زمانہ میں ڈلیوری آپریشن بھی ایک خاص طبقہ میں فیشن ایبل علاج بن کر رہ گیا ہے۔ لیکن ساتھ ہی ایک طبقہ ایسا بھی ہے جو ولا دت کے وقت آ پر یشن تو دور کی بات ہے ۔ درد تک کے لیے میڈیسن خریدنے کی پوزیشن میں بھی نہیں ہوتا۔

آج کل ولادت کے جتنے بھی کیسز ہو رہے ہیں ان میں سے زیادہ تر آپریٹ سے ہو رہے ہیں۔ ڈلیوری کیسز کے ذمہ دار صرف ڈاکٹر صاحبان ہی نہیں بلکہ وہ مائیں بھی ہیں جو درد جو ایک قدرتی عمل ہے اسے برداشت کرنے کے لیے تیار نہیں ہو تیں۔ ایک تحقیق کے مطابق لاکھوں خواتین بچوں کی پیدائش کے لیے غیر ضروری طور پر آپر یشن کرواتی ہیں جبکہ ان کے ہاں بچے کی پیدائش محفوظ قدرتی طور پر بھی ممکن ہو سکتی ہے۔ سی سیکشن سے پیدا ہونے والی ایک کمزور مدافعت ِ نظام کے حامل ہوتے ہیں اس لیے وہ فوری طور پر بیماری میں بھی مبتلا ہو سکتے ہیں

اور اگر آپ کا پہلا بچہ سی سیکشن سے ہوا ہے تو آپ کو اس بات کے لیے تیار رہنا چاہیے کہ اگلا بچہ بھی سی سیکشن سے ہی ہو گا ۔ اگلا بچہ بھی سی سیکشن سے ہونے کے امکا نات بڑ ھ جاتے ہیں۔ ڈلیوری آپر یشن کی تاریخ بہت پرانی اور بہت ہی زیادہ دلچسپ ہے۔ روم میں جو لیٹ سیزر نا می ایک شہنشاہ گزر ا ہے ۔ ولا دت کے وقت اس کی والدہ درد سے پر یشان اور نڈھال ہو ئے جا رہی تھیں ۔ ولادت کا راستہ تنگ ہونے کے باعث پیدائش میں مشکلات دکھائی دے رہی تھیں